مکالمہ

Saturday, May 29th, 2021

نیلے رنگ کے پتھروں سے تراشے ہوئے کنگن اس کے کلائیوں پر جچیں گے. یا پھر وہ ان کو بھی کسی دراز میں رکھ کر “کوئی تقریب ہو گی تو پہنوں گی” کا ورد کرنے لگی گی. یا تہذیب کو کسی گڑھے میں دفنا کر خود سے اس کو پہنا دینا ایک نامناسب لیکن لازمی عمل ہو گا جو مجھے کرنا ہی پڑے گا. ابھی میں دکان پر کھڑا یہی سوچ رہا تھا کہ ایک خاتون نے آگے بڑھ کر وہی جوڑی اٹھا لی. اور فورا ان کی قیمت ادا کر کے چلتی بنی. دکاندار مجھے دیکھ کر مسکرایا اور ملازم کو بول کر اوپر سے ایک نئی جوڑی لے آیا. وہ میری ایک کیفیت کو تو سمجھ گیا لیکن باقی سوال کو بھلا کیسے سمجھ سکتا. یوں میرے ہفتے کی شام تمام ہوئی. لیکن باقی سوالوں کے جواب ابھی باقی ہیں. کیونکہ
مکالمہ بحال نہیں. تاحال نہیں